میرا صفحہ > کہانیاں > غرور کا سر Bookmark and Share
  << پچھلی کہانی  |  اگلی کہانی >>  
Fahad Ahmed
Fahad Ahmed
The City Scool
غرور کا سر نیچا
تاریخِ تخلیق Feb 21st 2010
تمام تبصرے : 2
دیکھے گئے :  2205
1 فرد اس صفحہ کو پسند کرتا ہے!

پسند کیا

Rank 25 Out of 10
میں ایک مکھی ہوں، آج آپ کو اپنی بدصورتی کی کہانی سناتی ہوں، کبھی ہم مکھیاں بھی شہد کی مکھیوں جیسی ہی خوب صورت ہوا کرتی تھیں، ہماری ایک ملکہ ہوا کرتی تھی، ہمارے دن بہت ہی اچھے گزرا کرتے تھے کہ ایک دن ہماری پیاری ملکہ نے ہم سب مکھیوں کو اپنے دربار میں بلایا اور کہا کہ دیکھو ہم سب مکھیاں اتنی خوبصورت ہیں کہ شہد کی مکھیاں بھی اتنی خوب صورت نہیں، ملکہ کی اس بات سے ہم سب کے دلوں میں غرور پیدا ہوگیا اور ہم سب مکھیاں اپنی خوب صورت پر غرور کرنے لگیں، اللہ تعالیٰ کو ہمارا یہ غرور پسند نہ آیا، اور ہم سب مکھیوں کو اس غرور کی سزا یہ دی کہ ہمارے جسم کالے کردئیے اور ہمارے لیے گندگی کے ڈھیر پر بیٹھنا مقدر بن گیا اس لیے کہا جاتا ہے کہ غرور کا سر نیچا ہوتا ہے۔
  << پچھلی کہانی  |  اگلی کہانی >>  

تبصرے 2
Saba اچھی ہے Saba
Aug 7th 2011
 
 
ali khan

بہت خوب ! اچہی کہانی ہے.

Ali Khan
Apr 6th 2010
 
 

اپنا تبصرہ بھیجیں
 
 
Close
 
 
Stories Drawings Jokes Articles Poems