میرا صفحہ > کہانیاں > خسارہ Bookmark and Share
  << پچھلی کہانی  |  اگلی کہانی >>  
Sumayya Mansoor
Sumayya Mansoor
Student
خسارہ
تاریخِ تخلیق Feb 13th 2013
تمام تبصرے : 0
دیکھے گئے :  497
پسند کیا

Rank 1 Out of 10
دوستو! وقت ہمارے ہاتھوں سے پھسلتا چلا جارہا ہے اور ہم اس بات کا احساس تک نہیں کررہے۔ اگر ہم اپنی یادداشت پر زور ڈالیں تو یہ کچھ دن پہلے کی بات ہے کہ ہم میں سے بہت سے لوگوں نے سالِ نو کی ڈائری لی تھی اور جبکہ ابھی اس کا ٹھیک طرح سے استعمال بھی نہیں ہوا کہ سال ختم ہونے کو ہے۔ اگر ہم سب اس بات کا تجزیہ کریں کہ ہم نے اِس سال جس کی بس چند گھڑیاں ہی ہمارے ہاتھ رہ گئی ہیں، کیا کیا؟ کیا کھویا کیا پایا؟ کوئی ایسا کام بھی کیا جس کی بنا پر یہ کہہ سکیں کہ ہاں ہمارا یہ سال یونہی ضائع نہیں گیا؟ ہم میں سے بہت سوں کے پاس کوئی جواب نہ ہوگا۔ ہم نے کبھی اپنے سارے گزرے ہوئے دنوں اور سارے گزرے ہوئے سالوں کے لیے کچھ نہیں سوچا۔
یہ سال جو اختتام پذیر ہے اس میں ہم نے دیکھا کہ کس طرح سے ہمارے ملک کا امن تباہ کیا گیا۔ کس طرح سے قتل و غارت گری کا بازار گرم کیا گیا۔ لیکن کیا ہم میں سے کسی نے بھی اپنی زندگیوں میں سے کچھ وقت نکالا کہ اس ملک کے لیے کچھ کرسکیں؟ ہر انسان، ہر فرد صرف یہ سوچ رہا ہے کہ میرے کرنے سے کیا ہوگا! میرے اکیلے سے کیسے معاشرہ تبدیل ہوجائے گا
ایک دن سورج نے ڈوبتے ہوئے کہا: ہے کوئی جو میرے بعد میری جگہ لے سکے؟
مٹی کے ایک دیئے نے جواب دیا: ہاں میں کوشش کروں گا۔
ہم ہی وہ لوگ ہیں جنہیں کوشش کرنی ہے اپنے آپ کو، اپنے معاشرے کو، اپنے وطن کو بدلنے کی… پُرسکون بنانے کی۔
وقت تو گزر رہا ہے اور بے شک ہم سب صرف خسارے اور گھاٹے کا ہی سودا کررہے ہیں۔ فلاح تو وہی لوگ پائیں گے جن کا ذکر اللہ نے سورہ عصر میں کردیا ہے۔ اور اگر ہم آج بھی نہیں سمجھے اور اس نئے سال کو بھی پچھلے کئی سالوں کی طرح گزار دیا تو اللہ کو تو اپنا کام کرنا ہے۔ اللہ تعالیٰ جو چاہتا ہے وہ تو ہوکر ہی رہتا ہے۔ ہم نہ ہوں گے ہم سے بہتر لوگ ہوں گے جو یہ کام کرجائیں گے۔ لیکن ہمیں چاہیے کہ وہ ہم ہوں۔ بس کامیاب ہونا ہے تو آج ہی سے اپنے نئے سال کا لائحہ عمل بنا لیجیے اور پھر اس پر عمل کرنے کی پوری کوشش کیجیے۔
اللہ سے دعا ہے کہ وہ ہم سب کو اس نئے سال میں ایک نیا انسان اور ایک اچھا مسلمان بننے کی توفیق عطا کرے اور پاکستان اور عالم اسلام پر اپنی رحمتیں و برکتیں نازل فرمائے۔ آمین
  << پچھلی کہانی  |  اگلی کہانی >>  

تبصرے 0

اپنا تبصرہ بھیجیں
 
 
Close
 
 
Stories Drawings Jokes Articles Poems