Content on this page requires a newer version of Adobe Flash Player.

Get Adobe Flash player

صفحہ اول
لائبریری
تاریخ عالم > اسلامی تاریخ
بحر ظلمات میں...
انڈونیشیا کی...
قیام پاکستان
میسور کی...
قیصر کی شام...
مشرق اور مغرب...
فتح مکہ
صلح حدیبیہ
معرکہءبدر
مغلیہ سلطنت...
خشکی پر جہاز
تاتاریوں کو...
ہندوستان میں...
جامعہ ازہر کا...
الفانسو کی...
دعا
سرگرمیاں
انکل شائن
رسالہ
کیا آپ جانتے ہیں ؟
گیمز
تازہ ترین خبریں
 

تاریخ عالم

 
   

 

 

 
Bookmark and Share

Next   Back
 

اندلس میں اسلامی سلطنت

 
   
 
عربوں کے ہاتھوں ہسپانیہ کی تسخیر کا آغاز 92ھ/ 711ء میں ہوا۔ لیکن وہاں عربوں کی مستقل سلطنت کا سنگ بنیاد عبدالرحمن نے 138ھ/756ء میں رکھا وہ دمشق کے اموی خلیفہ ہشام بن عبدالملک کا پوتا تھا۔
عبدالرحمان پانچ برس کا تھا جب اس کے باپ معاویہ نے وفات پائی۔ دادا نے یتیم پوتے کو محبت اور ناز و نعم سے پالا۔ چوں کہ اسے ولی عہد بنانا چاہتا تھا۔ اس لیے بڑی اعلیٰ تعلیم دلائی۔ وہ بیس برس کا ہوا تو خاندان کے اقبال کا سورج ڈوب گیا۔ حکومت عباسیوں کے قبضے میں چلی گئی۔
ایک معمولی کشتی میں سوار ہو کر مراکش سے ہسپانیہ پہنچا۔ وہاں کچھ لوگ اموی خاندان کے اس شہزادے کا نام سن کر ساتھ ہوئے، لیکن قرطبہ کے حاکم نے مقابلے کی ٹھانی۔ عبدالرحمان نے بے سرو سامانی کے باوجود اسے شکست دی۔ پھر سارے اسلامی علاقوں کو ایک مرکز کے تحت لا کر اس بادشاہی کی بنیاد رھی جو ساڑھے تین سو سال تک قائم رہی۔ یورپ اس کی ہیبت سے لرزتا تھا۔ اس اموی عہد میں جو عمارتیں بنیں اس کی نظیر کوئی دوسرا ملک آج تک پیش نہ کرسکا۔ ان میں سے ایک مسجد باقی ہے۔ اگرچہ اس کی پرانی شان و شوکت ماند پڑچکی ہے، تاہم اب بھی وہ دنیا کی عبادت گاہوں میں یگانہ مانی جاتی ہے۔


 
Next   Back

Bookmark and Share
 
 
Close