Content on this page requires a newer version of Adobe Flash Player.

Get Adobe Flash player

صفحہ اول
لائبریری
نظمیں > دیگر
حمزہ کی گیند
یہ ننھے...
یوم پاکستان
خرگوش
پاک وطن کے...
اسکول
محنت
اٹھو سونے...
محنت
بات کرو
کھانا کھاﺅ...
نیلو کا مٹھو
دہلی
راوی کے کنارے
چاند نگر سے...
دعا
سرگرمیاں
انکل شائن
رسالہ
کیا آپ جانتے ہیں ؟
گیمز
تازہ ترین خبریں
 

نظمیں

 
   

 

 

 
Bookmark and Share

اگلا   Back
 

اسکول

 
  عباس العزم  
 
علم و دانش کا ہے نشاں‘ اسکول
آگہی کا ہے گلستاں، اسکول
تیرگی میں چراغ ہے اسکول
علم و حکمت کا باغ ہے اسکول
پھول کھلتے ہیں آگہی کے یہاں
گل مہکتے ہیں دل دہی کے یہاں
گوہر علم کا یہ مخزن ہے
درس و تدریس کا یہ گلشن ہے
مرکز علم ہے یہ سب کے لیے
ہے ادب گاہ، باادب کے لیے
ساری دنیا میں نام ہے اس کا
دہر میں فیض عام ہے اس کا
جو یہاں آکے فیض پاتے ہیں
روشنی بن کے جگمگاتے ہیں
 
اگلا   Back

Bookmark and Share
 
 
Close