Content on this page requires a newer version of Adobe Flash Player.

Get Adobe Flash player

صفحہ اول
لائبریری
نظمیں > مزاحیہ
بلی کا روزہ
بچارا بے قصور
بچ بچا کے
ہم فیل ہوگئے
چار مسافر
شریر ٹونی
یاد ہے
بھائی بھلکڑ
بلو کی مرغی
ٹوٹ بٹوٹ
مینا موری
ایک انوکھی...
حلوہ
ایک مزاحیہ...
بہت سے بچوں...
دعا
سرگرمیاں
انکل شائن
رسالہ
کیا آپ جانتے ہیں ؟
گیمز
تازہ ترین خبریں
 

نظمیں

 
   

 

 

 
Bookmark and Share

Next   Back
 

ایک مزاحیہ غزل

 
  مرزا ادیب  
 
حال اپنا سنا کے دیکھ  لیا
اور آنسو بہا کے دیکھ لیا

کون سنتا ہے ہم غریبوں کی
سب کو تو آزما کے دیکھ لیا

ایک چھٹی بھی ہم کومل نہ سکی
نت   بہانے   بنا  کے  دیکھ  لیا

منہ جو کڑوا تھا  وہ  رہا  کڑوا
ہم نے لڈو بھی کھا کے دیکھ لیا

کھا رہے ہیں چرا کے ہم بسکٹ
اور جو امی  نے آکر  دیکھ  لیا

ننھی دیتی نہیں  ہے  کھیر  اپنی
روکے دیکھا، رلا کے دیکھا لیا

دل بہلتا  نہیں  کسی  صورت
گیت بھی آج گا کے دیکھ  لیا

 
Next   Back

Bookmark and Share
 
 
Close