Content on this page requires a newer version of Adobe Flash Player.

Get Adobe Flash player

صفحہ اول
لائبریری
شخصیات > صحابہ
حضرت امیر...
حضرت عائشہ...
حضرت ابوبکر...
حضرت سعد بن...
حضرت فاطمتہ...
حضرت خدیجہ...
حضرت حسین رضی...
حضرت خالد بن...
حضرت علی رضی...
حضرت عثمان...
حضرت عمر...
دعا
سرگرمیاں
انکل شائن
رسالہ
کیا آپ جانتے ہیں ؟
گیمز
تازہ ترین خبریں
 

شخصیات

 
   

 

 

 
Bookmark and Share

Next   پچھلا
 

حضرت سعد بن ابی وقاص رضی اللہ عنہ

 
   
 
حضرت سعد بن ابی وقاص رضی اللہ عنہ ایک نامور سپہ سالار اور صحابی رسول صلی اللہ علیہ وسلم تھے آپ کا شمار عشرہ مبشرہ میں ہوتا تھا۔ نام سعد اور رکنیت ابو اسحاق ہے۔ آپ رسول اکرم کی والدہ کے چچا زاد بھائی تھے اورابتدا میں ہی اسلام قبول کرچکے تھے۔ آپ نہ صرف تمام غزوات میں شریک رہے بلکہ اسلام اور کفر کے تقریباً ہر معرکہ میں شامل ہوئے۔
حضرت عمر فاروق رضی اللہ عنہ کے دور میں جب ایران کے حملے کرنے کا خطرہ محسوس ہوا تو حضرت عمر نے آپ کو سپہ سالار اعظم کا عہدہ سونپ دیا اور س طرح آپ نے ایک بہت بڑی فوج کے ساتھ ایرانی لشکر پر چڑھائی کردی اور قادسیہ کے مقام پر پڑاﺅ ڈال دیا۔
یہاں 16 ءمیں گھمسان کی جنگ ہوئی۔ اس جنگ میں حضرت سعد خود عملی حصہ نہ لے سکے۔ کیونکہ وہ بیمار تھے۔ لیکن اپنی فوج کو برابر احکامات اور جنگی نقل و حرکت کے بارے میں ہدایات جاری کرتے رہے۔ بالآخر سردار رستم کے مارے جانے کے بعد یہ جنگ ختم ہوئی اور ایرانی شکست کھا کربھاگے۔
 اس سال آپ  کے بھتیجے ہاشم نے ایرانیوں کو ”کلو لائ“ کے مقام پر شکست فاش سے دوچار کیا۔ اور اس کے قریب ہی کوفے کی بنیاد رکھ دی۔ حضرت سعد نے کوفے آکر فوجی چھاﺅنی قائم کردی۔ یہ مسلمانوں کی پہلی چھاﺅنی تھی۔ جب حضرت عمر بستر علالت پر تھے انہوں نے نئے خلیفہ کا چناﺅ کرنے کےلئے جن چھ صحابہ کرام کو منتخب کیا تھا ان میں سے ایک آپ بھی تھے۔
 آپ کا انتقال تقریباً ستر سال کی عمر میں ہوا۔ آپ کو مدینہ منور کے قبرستان جنت البقیع میں دفن کیا گیا۔
 
Next   پچھلا

Bookmark and Share
 
 
Close