Content on this page requires a newer version of Adobe Flash Player.

Get Adobe Flash player

صفحہ اول
لائبریری
حدیث > عمومی
منافقت
پانچ نمازیں
جھوٹ بولنا
دعوت
رشتہ داری کا...
تحفے
شکریہ
نیکی
شب قدر
باب الریان
روزہ دار
بخیل شخص
کلمہ
توبہ
گمان
دعا
سرگرمیاں
انکل شائن
رسالہ
کیا آپ جانتے ہیں ؟
گیمز
تازہ ترین خبریں
 

احادیث

 
   

 

 

 
Bookmark and Share

اگلا   Back
 

پانچ نمازیں

 
   
 
حضرت ابو ہریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ روایت کرتے ہیں کہ میں نے اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کو ارشاد فرماتے سنا، تم لوگوں کا کیا خیال ہے کہ اگر کسی شخص کے دروازے پر نہر ہو، جس میں وہ روزانہ پانچ مرتبہ نہاتا ہو کیا ایسے شخص کے بدن پر کچھ میل کچیل باقی رہے گا۔ سب نے عرض کی کہ اس پر کسی قسم کا میل باقی نہ رہے گا، آپ نے فرمایا، بس یہی مثال پانچ نمازوں کی ہے ان کی وجہ سے اللہ تعالیٰ بندے کے گناہ معاف کرتا ہے۔
بخاری، کتاب مواقیت الصلوة
 
اگلا   Back

Bookmark and Share
 
 
Close