Content on this page requires a newer version of Adobe Flash Player.

Get Adobe Flash player

صفحہ اول
لائبریری
دریافت > سائنس
ریڈیم
دوربین
کونین
اسٹین لیس...
چیچک کا تریاق
دوران خون کا...
پنسلین
ایکسرے
ایتھر
خوردبین
سورج کے گرد...
قطب نما
بارود
دعا
سرگرمیاں
انکل شائن
رسالہ
کیا آپ جانتے ہیں ؟
گیمز
تازہ ترین خبریں
 

دریافتیں

 
   

 

 

 
Bookmark and Share

Next   Back
 

پنسلین

 
   
 
اتفاق اور ذہن رسا کی فتح کا ایک شاندار کارنامہ سرالیگزانڈر فلیمنگ کے ہاتھوں سینٹ میری کے ہسپتال (لندن) میں انجام پایا اور پنسلین ایجاد ہوئی۔ جسے دنیا کی عجیب الاثر دوا سمجھا جاتا ہے۔ سر الیگزانڈر پہلی عالمگیر جنگ میں برطانیہ کی میڈیکل کور کارکن تھا۔ اسے یہ دیکھ کر حد درجہ قلق ہوتا کہ اگرچہ زخمیوں کے لیے بروقت اعلیٰ درجے کی طبی امداد کا انتظام کردیا جاتا تھا پھر بھی خون میں زہریلے جراثیم پھیل جانے سے بے شمار موتیں واقع ہوجاتی تھیں۔ چنانچہ میدان جنگ ہی میں اس نے فیصلہ کرلیا کہ باقی زندگی ان جراثیم کی تحقیقات میں گزار دے گا جو زخمیوں کی موت کا باعث ہوتے ہیں۔
ایک روز وہ اپنی تجربہ گاہ میں کام کررہا تھا۔ کیا دیکھتا ہے کہ پیپ پیدا کرنے والے جراثیم پھپھوندی کے ایک چھوٹے سے ٹکڑے سے چمٹے ہوئے ہیں۔ انس نے خوردبین سے دیکھا تو جراثیم مررہے تھے پھر اس نے  پھپھوندی کے اثرات کا خوب تجربہ کیا اور یہ دیکھ کر حیران رہ گیا کہ انسانی جسم میں زہر پیدا کرنے والے جراثیم کی اکثر قسمیں اسی سے ہلاک ہوجاتی ہیں۔ یہ بھی تجربہ کرلیا گیا کہ پھپھوندی سے تیار کی ہوئی دوا انسانی جسم پر کوئی مضر اثر نہیں ڈالتی۔ اس تاریخی دریافت نے طبی دنیا میں انقلاب پیدا کردیا۔

 
Next   Back

Bookmark and Share
 
 
Close