Content on this page requires a newer version of Adobe Flash Player.

Get Adobe Flash player

صفحہ اول
لائبریری
مضامین > معلوماتی
شہاب ثاقب
انوکھے درخت
دریائے نیل
شارک
طویل و مختصر...
لو سے بچنے کے...
سنہری...
شتر مرغ۔ سب...
پیاز کے عرق...
کھیدا
دریائے...
فیئری میڈوز
تاریخ لاہور...
راکا پوشی
ریڈیو۔۔۔ ایک...
دعا
سرگرمیاں
انکل شائن
رسالہ
کیا آپ جانتے ہیں ؟
گیمز
تازہ ترین خبریں
 

مضامین

 
   

 

 

 
Bookmark and Share

Next   Back
 

فیئری میڈوز

 
   
 

فیئری میڈوز پاکستان کے شمالی علاقوں میں ہمالیہ کے پہاڑی سلسلے میں واقع ہے۔ راولپنڈی سے گلگت جاتے ہوئے شاہراہِ قراقرم پر گلگت سے تقریبا'' دو گھنٹے پہلے رائے کوٹ نامی ایک جگہ آتی ہے۔ وہیں سے ایک خطرناک قسم کا راستہ فیئری میڈوز کو جاتا ہے۔ رائے کوٹ سے تقریبا'' چالیس منٹ کی جیپ کی انتہائی دشوار اور سانس روکنے والی چڑھائی ہے۔ اس کے بعد تقریبا'' چھ کلومیٹر پیدل چلنا پڑتا ہے۔ اس چھ کلومیٹر میں بھی دو سے تین گھنٹے لگ جاتے ہیں کیونکہ چڑھائی کافی ہے۔
فیئری میڈوز کی سب سے اہم بات جو کہ تصاویر سے بھی پتا چلتی ہے، وہ ہے وہاں سے نانگاپربت جو کہ دنیا کا نواں بلند ترین پہاڑ ہے، وہ بالکل نزدیک ہے اور سامنے نظر آتا ہے۔ یہیں سے نانگا پربت کے بیس کیمپ پر بھی جا سکتے ہیں۔ فیئری میڈوز غیر ملکی سیاحوں کی توجہ کا خاص مرکز ہے۔ وہاں فرنچ، جرمن، امریکن، جاپانی، کورین سیاح کافی تعداد میں موجود تھے۔ 
اس جگہ کے بالکل ساتھ ہی نانگاپربت سے آنے والا ہیبت ناک گلیشیئر بھی گزرتا ہے جس کا نام رائے کوٹ گلیشیئر ہے۔

 
Next   Back

Bookmark and Share
 
 
Close