Content on this page requires a newer version of Adobe Flash Player.

Get Adobe Flash player

سرگرمیاں   رسالہ
   
Bookmark and Share
     
قطب نما بنائیں کٹیگیری: جغرافیہ
تاریخ: 2010-12-09
 

کرنے کے کام

قطب نما بنانے کے لیے سب سے ضروری چیز مقناطیسی سوئی ہے۔
ایک سوئی لیں اور اس پر مقناطیس کو ایک ہی سمت میں بار بار رگڑیں، ایک ہی سمت سے مراد یہ ہے کہ مقناطیس کا ایک قطب سوئی کے ایک سرے سے دوسرے سرے تک رگڑتے ہوئے لے جائیں۔ دوسرے سرے پر پہنچ کر اسے اٹھالیں اور پھر پہلے سرے پر رکھ کر دوسرے سرے تک مقناطیس کو رگڑتے ہوئے لے جائیں۔ دوسرے سرے پر پہنچ کر اس کو سوئی پر سے اٹھالیں، اس طرح بار بار رگڑنے سے سوئی میں مقناطیسیت پیدا ہوجائے گی، یہی آپ کی مقناطیسی سوئی ہے۔
اب اگر ہم سوئی کو پانی سے بھری ہوئی طشتری پر آہستہ سے رکھیں گے تو سوئی پانی کے سطح پر پانی کی ایک خاصیت یعنی سطحی تناﺅ کی وجہ سے تیرتی رہے گی اور اس کا ایک سرا قطب شمالی کی طرف اور دوسر قطب جنوبی کی طرف ہوجائے گا۔ یوں تو یہ سوئی بھی قطب نما کا کام دے سکتی ہے لیکن ہم اس سے بہتر قسم کا قطب نما بنانا چاہتے ہیں۔
ایک کارک لے کر اسے آلو کے قتلے کی طرح کاٹ لیں۔ یہ خیال رہے کہ قتلا کم از کم آدھ انچ موٹا ہو پھر مقناطیسی سوئی کو کارک کے قتلے میں سے یوں گزاردیں کہ اس کے دونوں سرے کارک سے باہر رہیں۔ اس کے بعد ایک کاغذ کو کارک کے بالکل برابر گول کاٹ کر اس پر دو خط اس طرح کھینچیں کہ وہ ایک دوسرے کو کاٹتے ہوئے زاویہ قائم بنائیں۔ ایک خط کے سروں پر شمال، جنوب اور دوسرے خط کے سروں پر مشرق، مغرب ظاہر کرنے کے لیے ترتیب وار لکھ دیں۔
اس کے بعد کارک کو پانی سے بھری ہوئی طشتری میں چھوڑ دیں۔ کارک میں لگی ہوئی سوئی جہاں رکے، وہاں ایک طرف کو شمال اور دوسرے سرے کی طرف جنوب ہوگا۔ یوں بھی آپ کو پتا ہی ہوگا کہ آپ کے گھر میں شمال کس طرح ہے اور جنوب کس طرح، اب وہ کاغذ جس پر آپ نے شمال، جنوب، مشرق اور مغرب لکھا ہے، سمتوں کا تعین کرکے کارک پر چپکادیں، آپ کا قطب نما تیار ہے۔
 
Bookmark and Share
 
 
  • سوئی
  • مقناطیس
  • کارک
  • پانی کی طشتری
  • کاغذ
  • پنسل، قینچی اور رولر

 
   
Close